Home » Tag Archives: نعت

Tag Archives: نعت

نعمتیں بانٹتا جس سمت وہ ذیشان گیا:کلام اعلیٰحضرت احمدرضا بریلوی

نعمتیں بانٹتا جس سمت وہ ذیشان گیا ساتھ ہی منشی رحمت کا قلم د ان گیا لے خبر جلد کہ غیروں کی طرف دھیان گیا میرے مولیٰ میرے آقا تیرے قربان گیا دل ہے و ہ دل جو تیری یا د سے معمو ر رہا سر ہے وہ سر جو تیرے قدموں پہ قربا ن گیا انہیں جانا انہیں ما ...

Read More »

لَم یَاتِ نَظِیرُکَ فِی نَظَر، کلام اعلیٰ حضرت امام احمدرضا

درج ذیل نعت اعلیٰ حجرت امام احمدرضا فاضل بریلوی کی نعت گوئی کا کمال ہے۔ ہر شعرمیں 4 مختلف زبانیں موجود ہیں۔ شعر کا آغاز عربی اور فارسی سے جبکہ اختتام ہندی اور اردو پر ہے۔ لَم یَاتِ نَظِیرُکَ فِی نَظَر ٍ مثلِ تو نہ شد پیدا جانا جگ راج کو تاج تورے سر سو ہے تجھ کو شہ دوسرا ...

Read More »

سلام اس (صلی اللہ علیہ والہ وسلم) پر

سلام اس (صلی اللہ علیہ والہ وسلم) پر جو ظلمتوں میں منارہ روشنی ہوا ہے وہ ایسا سورج ہے جس کی کرنیں ازل ، ابد کے تمام گوشوں میں نور بن کر سما چکی ہیں ہر ایک ذرکے کا ماہ تاباں بنا چکی ہے سلام اس (صلی اللہ علیہ والہ وسلم) پر​ سلام اس ( صلی اللہ علیہ والہ وسلم ...

Read More »

حضور آئے تو کیا کیا ساتھ نعمت لے کے آئے ہیں

حضور آئے تو کیا کیا ساتھ نعمت لے کے آئے ہیں اخوت ، علم وحکمت ، آدمیت لے کے آئے ہیں​ کہا صدیق نے میری صداقت ان کا صدقہ ہے عمر ہیں ان کے شاہد وہ عدالت لے کے آئے ہیں​ کہا عثمان نے میری سخاوت ان کا صدقہ ہے علی دیں گے شہادت وہ شجاعت لے کے آئے ہیں​ ...

Read More »

ناروے: مسلم سنٹر فیورست میں عظیم الشان محفل نعت کا انعقاد ، حسان منہاج افضل نوشاہی اورعابد معصومی کی خصوصی شرکت

ناروے۔ مسلم سنٹر فیورست میں عظیم الشان محفل نعت کا انعقاد ، حسان منہاج افضل نوشاہی اور عابد معصومی کی خصوصی شرکت اوسلو(عقیل قادر) ما ہ میلاد النبی ﷺ کی خوشی میں ناروے کے ہر چھوٹے بڑے شہر اور محلوں میں محفلیں منعقد کی گئی ہیں اور محافل کا تسلسل مسلسل جاری ہے۔ حضور نبی اکرم ﷺ کی آمد کی ...

Read More »

ہر وقت تصور میں مدینے کی گلی ہے (اقبال عظیم)۔

ہر وقت تصور میں مدینے کی گلی ہے اب در بدری ہے نہ غریب الوطنی ہے   وہ شمع حرم جس سے منور ہے مدینہ کعبے کی قسم رونق کعبہ بھی وہی ہے   اس شہر میں بک جاتے ہیں خود آ کے خریدار یہ مصر کا بازار نہیں ، شہر نبیؐ ہے   اس ارضِ مقدس پہ ذرا دیکھ ...

Read More »

میں لب کشا نہیں ہوں اور محو التجا ہوں(اقبال عظیم)۔

میں لب کشا نہیں ہوں اور محو التجا ہوں میں محفل حرم کے آداب جانتا ہوں جو ہیں خدا کے پیارے میں ان کو چاہتا ہوں اُن کو اگر نہ چاہوں تو اور کس کو چاہوں ایسا کوئی مسافر شاید کہیں نہ ہوگا دیکھے بغیر اپنی منزل سے آشنا ہوں کوئی تو آنکھ والا گزرے گا اس طرف سے طیبہ ...

Read More »

میں تو خود انؐ کے در کا گدا ہوں(اقبال عظیم)۔

میں تو خود انؐ کے در کا گدا ہوں ، اپنے آقاؐ کو میں نذر کیا دوں اب تو آنکھوں میں بھی کچھ نہیں ہے ورنہ قدموں میں آنکھیں بچھا دوں آنے والی ہے اُنؐ کی سواری ، پھول نعتوں کے گھر گھر سجا دوں میرے گھر میں اندھیرا بہت ہے ، اپنی پلکوں پہ شمعیں جلا دوں میری جھولی ...

Read More »

جہاں روضۂ پاک خیر الوریٰ ہے (اقبال عظیم)۔

جہاں روضۂ پاک خیر الوریٰ ہے وہ جنت نہیں ہے ، تو پھر اور کیا ہے کہاں میں کہاں یہ مدینے کی گلیاں یہ قسمت نہیں ہے تو پھر اور کیا ہے   محمدؐ کی عظمت کو کیا پوچھتے ہو کہ وہ صاحب قاب قوسین ٹھہرے بشر کی سرِ عرش مہماں نوازی ، یہ عظمت نہیں ہے تو پھر اور ...

Read More »

مدینے کا سفر ہے اور میں نم دیدہ نم دیدہ (اقبال عظیم)۔

مدینے کا سفر ہے اور میں نم دیدہ نم دیدہ جبیں افسردہ افسردہ ، قدم لغزیدہ لغزیدہ   چلا ہوں ایک مجرم کی طرح میں جانب طیبہ نظر شرمندہ شرمندہ بدن لرزیدہ لرزیدہ   کسی کے ہاتھ نے مجھ کو سہارا دے دیا ورنہ کہاں میں اور کہاں یہ راستے پیچیدہ پیچیدہ   غلامان محمد دور سے پہچانے جاتے ہیں ...

Read More »

کھلا ہے سبھی کے لیے بابِ رحمت (اقبال عظیم)۔

کھلا ہے سبھی کے لیے بابِ رحمت وہاں کوئی رتبے میں ادنیٰ نہ عالی مرادوں سے دامن نہیں کوئی خالی، قطاریں لگائے کھڑے ہیں سوالی   میں پہلے پہل جب مدینے گیا تھا، تو تھی دل کی حالت تڑپ جانے والی وہ دوبارہ سچ مچ مرے سامنے تھا، ابھی تک تصور تھا جس کا خیالی   جو اک ہاتھ سے ...

Read More »